331

انڈے صحت دوست یا پھر دشمن....

انڈوں کو اب تک کی طاقتور اور بہترین غذا سمجھا جاتا رہا ہے اور یہ تقریبا سب کی پسندیدہ غذا میں بھی شمار ہوتے ہیں۔ ماہرین صحت یا اب تک کی سامنے آنے والی تحقیقات میں اگرچہ زیادہ انڈے کھانے کے تھوڑے سے نقصانات ضرور بتائے گئے تھے، تاہم انہیں کھانے کے کئی فائدے بتائے گئے ہیں۔ ماہرین صحت کے مطابق انڈے نہ صرف جسم میں توانائی بڑھاتے ہیں بلکہ یہ جلد اور بالوں کی رونق بڑھانے سمیت دماغ، دانتوں، بینائی کو بھی بہتر بنانے میں مدد فراہم کرتے ہیں۔ انڈوں کو بھوک سے جان چھڑانے والی غذا کے طور پر بھی جانا جاتا ہے۔ انہیں سردیوں میں انسانی جسم اور صحت کی حفاظت کا ضامن بھی سمجھا جاتا ہے، تاہم حال ہی میں ہونے والی ایک تحقیق نے سب کو حیران کردیا۔ امریکا میں ہونے والی ایک حالیہ تحقیق کے نتائج سے یہ انکشاف ہوا کہ ہفتے میں 4 سے زیادہ اںڈے کھانے والے افراد عام لوگوں کے مقابلے قبل از وقت مرسکتے ہیں۔ ماہرین نے گزشتہ ساڑھے 17 سال کے دورانیے کا جائزہ لیا اور یہ جاننے کی کوشش کی کہ انڈے کھانے سے لوگوں کی صحت پر کیا اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ رپورٹ میں بتایا گیاہے کہ ماہرین کو جائزے کے نتائج نے حیران کردیا۔ نتائج میں یہ بات سامنے آئی کہ ہفتے میں 3 سے 4 انڈے کھانے والے افراد کو نہ صرف دل کی بیماریاں زیادہ ہوتی ہیں بلکہ وہ قبل از وقت موت کا شکار بھی ہوتے ہیں۔ نتائج کے مطابق اگر کوئی بھی شخص ہفتے میں 4 سے زائد انڈے یا یومیہ 300 ملی گرام کولیسٹرول پر مبنی غذا کھائے گا تو نہ صرف دل کی بیماریوں کا شکار ہوگا بلکہ وہ قبل از موت کا شکار بھی بن سکتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق ایک انڈے میں 186 ملی گرام کولیسٹرول موجود ہوتا ہے اورہفتے میں 4 انڈے کھانے کا مطلب ہے کہ ہر شخص 700 ملی گرام سے زیادہ کولیسٹرول حاصل کر چکا ہے۔ یہ بھی پڑھیں: صرف ایک انڈہ روزانہ کھانا کیا اثرات مرتب کرتا ہے؟ ماہرین کے مطابق نتائج سے پتہ چلا کہ ہفتہ وار 4 سے زائد انڈے کھانے والے افراد عام لوگوں کے مقابلے جلد بیماریوں میں مبتلا ہوتے ہیں، ایسے افراد میں دل کے امراض پیدا ہونے کے امکانات 6 فیصد بڑھ جاتے ہیں۔ اسی طرح ہفتے میں 3 سے 4 انڈے کھانے والے افراد میں مختلف وجوہات کی بناء پر قبل از وقت مرنے کے امکانات 8 فیصد بڑھ جاتے ہیں۔ ماہرین نے عام افراد پر زور دیا کہ انہیں ہفتے میں 4 سے زائد انڈے نہیں کھانے چاہیے۔ ساتھ ہی ماہرین کا کہنا تھا کہ کسی بھی صورت لوگوں کو یومیہ 300 ملی گرام کولیسٹرول پر مبنی غذا اور خصوصی طور پر انڈے نہیں کھانے چاہیے۔ مزید پڑھیں: انڈے صحت کے لیے مضر یا فائدہ مند؟ ماہرین نے یہ تجویز بھی دی کہ انڈوں سے متعلق ماہرین کی جانب سے دیے گئے مشوروں کو بھی تبدیل کیا جائے، کیوں کہ ماہرین انڈے کھانے کے جو مشورے دے رہے ہوتے ہیں وہ کئی سال پرانی تحقیق پر مبنی ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اب انڈوں کی غذائیت کے حوالے سے جدید تحقیق کرنے اور انہیں کھانے کے مشوروں پر تبدیلی کا وقت آ چکا ہے۔ انڈوں کے حوالے سے سامنے آنے والی اس تحقیق کے نتائج کے بعد دنیا بھر میں ماہرین انڈوں پر بحث میں لگ گئے ہیں اور عام افراد اضطراب میں مبتلا ہوچکے ہیں۔