120

میرا پیارا پاکستان 


خوبصورت نظارے 
حسین و دلکش وادیاں 
کہیں آبشاریں تو کہیں جھیلیں 
کہیں سر سبز چادر اوڑھے پہاڑ 
گنگناتی ہوائیں 
رم جھم برستا بارش کا پانی 
خوبصورت قوسِ قزح 
بیشمار دھنک کے رنگ 
ان رنگوں میں قدرت کا پیار 
چلچلاتی دھوپ 
اس دھوپ میں لہراتی سنہری گندم کی بالیاں 
ٹھنڈی برفانی ہوائیں 
پہاڑوں کا سفید چادر اوڑھنا 
واہ میرے اللہ تیرا کیا کہنا 
بہار کا رنگیلا موسم 
رنگ برنگے پھول 
خوشبو بکھیرتی ہوائیں 
مدہوش کرتی رقص کرتی 
پھولوں سے بھری ٹہنیاں 
اٹھکیلیاں کرتی 
شکر ادا کرتی اپنے رب کا 
ہر موسم کی ادا نرالی 
کیسی تو نے کائنات بنا ڈالی 
چپہ چپہ تیری قدرت کا نشاں 
پھر بھی کتنے ناشکرے ہیں ہم انساں